متحدہ عرب امارات کی بحرین میں انسداد اسمگلنگ فورم میں شرکت

  • الإمارات تشارك في اجتماعات المنتدى الحكومي لمناقشة تحديات مكافحة جرائم الإتجار بالبشر
  • الإمارات تشارك في اجتماعات المنتدى الحكومي لمناقشة تحديات مكافحة جرائم الإتجار بالبشر

منامہ،20 اکتوبر، 2019 (وام) ۔۔ متحدہ عرب امارات نے بحرین کے دارلحکومت منامہ میں ہونے والے دو روزہ انسداد اسمگلنگ فورم میں حصہ لیا ہے۔ مشرق وسطی میں انسداد اسمگلنگ کےحکومتی فورم کا انعقاد بحرین کے وزیر خارجہ شیخ خالد بن احمد الخلیفہ کی سرپرستی اور منشیات و جرائم کے بارے میں اقوام متحدہ کے آفس ، خلیج تعاون کونسل اور بین الاقوامی تنظیم برائے مہاجرت کے تعاون سے 14 سے 16اکتوبر تک کیا گیا۔ دو روزہ فورم کے دوران متحدہ عرب امارات کے وفد کی سربراہی وزارت خارجہ اور بین الاقوامی تعاون کے معاون وزیر برائے بین الاقوامی تنظیمیں یعقوب یوسف الحسانی نے کی۔ فورم میں مشرق وسطی کے آٹھ ممالک کی قومی کمیٹی کے نمائندوں نے خطے میں انسانی اسمگلنگ کی روک تھام اور اس حوالے سے چیلنجوں کا مقابلہ پر تبادلہ خیال کیا۔ فورم کے دوران الحسانی نے متعلقہ ممالک اور بین الاقوامی اداروں اور تنظیموں کے ساتھ براہ راست تعاون کے ذریعے اسمگلنگ کو روکنے کے لئے متحدہ عرب امارات کی کوششوں پر روشنی ڈالی۔ انہوں نے انسانی اسمگلنگ کی علاقائی وجوہات کی نشاندہی کرنے کی اہمیت پر بھی زور دیا تاکہ اسمگلنگ کا مقابلہ کرنے میں ملوث افراد کی تربیت کی جا ئے اور کمیونٹیز کے اندر اور کمزور افراد کے مابین سفارت خانوں اور عالمی تنظیموں کے تعاون سے شعور اجاگر کیا جاسکے۔ الحسانی نے مشترکہ اقدامات شروع کرنے، مہارت کا تبادلہ کرنے اور انسانی اسمگلنگ سے نمٹنے کے لئے مزید تعاون کو فروغ دینے کی ضرورت پر زور دیا۔ فورم میں شریک ممالک نے آئندہ اجلاس کی میزبانی کی متحدہ عرب امارات کی پیشکش کا خیرمقدم کیا۔ ترجمہ: ریاض خان ۔ http://www.wam.ae/en/details/1395302796091

WAM/Urdu