پیر 21 ستمبر 2020 - 1:50:03 صبح

عالمی برادری دہشتگردی اور منظم جرائم میں روابط کا انسداد کرے:متحدہ عرب امارات


نیویارک، 9 اگست،2020 (وام) ۔۔ متحدہ عرب امارات نے عالمی برادری پر زور دیا ہے کہ وہ دہشتگردی اور منظم جرائم کے مابین روابط سے نمٹنے کے لئے قانونی ڈھانچوں کو مستحکم اور اقوام متحدہ کی متعلقہ قراردادوں پر عمل درآمد کو یقینی بنائے۔ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں دہشتگردی کی کارروائیوں خاص طور پر دہشتگردی اور بین الاقوامی منظم جرائم کے مابین روابط کے نتیجے میں عالمی امن اور سلامتی کو لاحق خطرات پر بحث کی گئی ۔ متحدہ عرب امارات کی طرف سے تحریری بیان میں کہا گیا ہے کہ امارات نے 2019 میں سلامتی کونسل کی قرارداد 2482 میں تعاون کیا تھا کیونکہ متحدہ عرب امارات کو پختہ یقین ہے کہ منظم جرائم سمیت مالی اعانت کے تمام ذرائع کی بیخ کنی کے بغیر بین الاقوامی دہشتگردی کے خاتمے کے لئے ہماری کوششیں کامیاب نہیں ہوسکتی ہیں۔ متحدہ عرب امارات نے کورونا وائرس وباء کے پس منظر میں منظم جرائم اور دہشتگردی کے درمیان بڑھتے ہوئے رابطے پر بھی تشویش کا اظہار کیا۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ متحدہ عرب امارات دہشتگردی کی مالی اعانت روکنے کے لئے قانون نافذ کرنے والے اداروں کی کوششوں میں اضافے کے ساتھ انسداد منی لانڈرنگ اور دہشتگردی کی مالی معاونت کے انسداد کے اپنے نظام کو مستحکم کرنے کے لئے فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کی تازہ ترین سفارشات پر عمل درآمد کر رہا ہے۔ متحدہ عرب امارات نے کہا کہ اقوام متحدہ کے نظام کو دہشتگردی کی مالی اعانت کے انسداد کے بین الاقوامی کنونشن کے تحت سلامتی کونسل کی قراردادوں کی خلاف ورزی کرنے اور دہشتگردی کی مالی اعانت کرنے والے رکن ممالک کا بھی احتساب کرنا چاہیئے۔ متحدہ عرب امارات نے کہا کہ دہشتگردی کے خطرات اور منظم جرائم سے نمٹنے کے لئے دہشتگردی سے سب سے زیادہ متاثرہ ملکوں اور خطوں میں انسانی، مالی اور لاجسٹک وسائل کی فراہمی کے ذریعے حکومتوں، نجی شعبے اور متعلقہ اداروں کی صلاحیت کو بڑھانے کی ضرورت ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ دہشتگردی اور جرائم پیشہ گروہوں کے درمیان اسمگلنگ نیٹ ورک ختم کرنے کیلئےمشترکہ کوششوں کی ضرورت ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ متحدہ عرب امارات نے GoAML پروگرام بھی شروع کیا ہے جس میں منشیات اور جرائم سے متعلق اقوام متحدہ کے دفتر کے تعاون سے منشیات کی فراہمی اور دہشتگردی کی مالی اعانت سے نمٹنے کے لئے مالی معلومات اکٹھا کرکے انکا تجزیہ کیا جاتا ہے ۔ بین الاقوامی قومی خطرات سے نمٹنے کے لئے مقامی، علاقائی اور بین الاقوامی سطح پر زیادہ سے زیادہ تعاون کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے متحدہ عرب امارات نے کہا کہ وہ مشرق وسطی اور شمالی افریقہ کے لئے فنانشل ایکشن ٹاسک فورس (رابطہ گروپ) کا ایک بانی رکن ہے اور خطے میں دہشتگردی کی مالی اعانت سے نمٹنے کے لئے مالی انٹیلی جنس یونٹوں کے مابین معلومات کے تبادلے میں اہم کردار ادا کرتا ہے۔ متحدہ عرب امارات نے کہا کہ عالمی سطح پر اس نے فرانس اور یونیسکو کے باہمی تعاون سے تنازعات کے شکار علاقوں میں دہشتگرد گروپوں کی طرف سے ثقافتی املاک کی تباہی اور غیرقانونی اسمگلنگ کو روکنے کے لئے ثقافتی ورثہ کے تحفظ کا بین الاقوامی اتحاد قائم کیا۔ متحدہ عرب امارات نے اس بات پر زور دیا کہ دہشتگردی اور منظم جرائم کے مابین روابط کو ختم کرنے کی حکمت عملی ہر ملک اور خطے کے لحاظ سے مختلف ہونی چاہیئے۔ متحدہ عرب امارات نے کہا ہے کہ اس کے لئے وسیع پیمانے پر تحقیق اور علاقائی اسٹیک ہولڈرز کی شمولیت ضروری ہے۔ ترجمہ: ریاض خان ۔ https://wam.ae/en/details/1395302861094

WAM/Urdu